53f4acba4566d

نوجوان لیڈر کہاں ہیں؟

میں اپنے ملک کے حالات سے بے حد پریشان ہوں۔  میرے احساسات بیان کے قابل ہیں مگر میں ان کا اظہار نہیں کروں گا۔ کیونکہ یہ عمل بے سود ہوگا۔  مگر  میںاپنے اس  مضمون  میں ان  کی بنیادی وجوہات پرر وشنی ڈالنا چاہوں گا جس کا بیان نہایت اہم ہے۔ ۔ کسی بھی ملک کی ترقی کا دارومدار اس کے لیڈر پر ہوتا ہے۔ مگر اس کے انتخاب میں عوام کا سب سے اہم کردارہے۔ اس سلسلے میں جب ہم اپنی عوام پر نگاہ ڈالتے ہیں تو  معلوم ہوتا ہے  کہ  آج کل کے نوجوان یا تو مایوس ہیں یا  بغیر سوچے سمجھے کسی بھی   (بظاہر)انقلابی کو  اپنا رہبر  تصور کر لیتے ہیں۔ اس مکتبِ فکر  کو اردیشیر کاوس جی  ان لفظوں  میں یاد فرماتے ہیں: “.Best of worst lot” سوال یہ ہے کہ آخر ہم اپنے آپ کو…

Category : Shikva
Tags :
vpr-program-mlkspecial-20140120

ہم اپنے حقوق کس طرح حاصل کریں؟

پیارے ہم وطنوں! ہمیں بچپن سے یہ سکھا یا گیا ہے کہ ہم اپنے حقوق کے لیے لڑیں۔ مگر کسی نے ہمیں یہ نہیں سمجھا یا کہ یہ  کام ہمیں  کس طرح کر نا چاہیے؟  اسی صورتِ حال کے پیشِ نظر میں نے سوچا کہ ایک خط اپنی عوام کے نام لکھوں جس میں اس اہم مسئلے پر روشنی ڈالی جائے۔ ۔ حقوق کی جدو جہد میں ہمارا رویّہ کافی  عجیب  ہوتا  ہے۔   ہم یا تو حاکم کے آگے گھٹنے ٹیک کر اپنے دماغ کو صندوق میں بند کر دیتے ہیں یا اٹھ کھڑے ہوں تو رشتے ناتوں کو ہی روند دیتے ہیں۔۔ اپنے آس پاس دیکھیے۔ اکژ نظر آتا ہے کہ انسان یا تو اپنے ماں باپ کے  کسی نامناسب  رویّے کو برداشت کرتا رہتا ہے، یا ان سے لڑ  جاتا ہے۔۔بیچ کا رستہ، امن کا رستہ، غیر مسلّح جد…

Category : Shikva
Tags :
7e31662c3d7349e4_landing

میرے عزیز ہم وطنوں

میرے عزیز ہم وطنوں، ۱۹۴۷ ؁ سے ہم آزادی کا جشن مناتے آئے ہیں۔  پر آج کچھ لوگوں کو  خون  میں رنگی سڑکوں پر یہ  جھنڈیاں اور بتّیاں اچھی نہیں لگتیں۔ تو  کیااس کا مطلب یہ ہے کہ  ہم اسے ‘یومِ سوگ ‘  قرار دے دیں ؟ مجھے یہ بھی گوارا نہیں۔  تومیں نےیہ سوچا ہے کہ اس ملک کےسربراہ کی حیثیت سے میں جشنِ آزادی کے بجائے ‘عزم ِآزادی’ مناؤں گا۔۔جھنڈیاں اور بتّیاں لگی رہنی چاہئیں، لیکن ہر سال ہمیں کچھ ایسا عزم کرنا ہوگا کہ چاہے دشمن ہمیں کتنا ہی  منتشر کرنے کی کوشش  کرے، یہ جھنڈیاں اور بتّیاں ہمیں متّحد اور پر عزم رکھیں۔ اس تبدیلی کی شروعات آج سے ہو گی، اور مجھ ہی  سے ہو گی۔۔۔۔ سب سے پہلے، میں اعلان کرتا ہوں کہ وزارتِ عظمیٰ کے اخراجات میں پچاس فیصد کمی کی جائیگی اور بچائی…

Tags :
Qandeel-Baloch2

قندیل ہم شرمندہ ہیں

قندیل بلوچ کو کل اس کے اپنے بھائی نے موت کی گھاٹ اتار دیا۔جب سے یہ خبر سنی ہے سمجھ نہیں آ رہا کہ کیا کہا جائے۔ ایسا لگتا ہے جیسے کہنے کو کچھ نہیں بچا ۔لیکن کہنے کوتو بہت کچھ ہے۔۔ ۔۔دوسرے کئی لوگوں کی طرح قندیل کے بارے میں میری بھی یہی رائے تھی کہ ایکٹر اور ماڈل شہرت کے لئے بہت کچھ کرتے ہیں۔ حال ہی  میں جب یہ خبر آئی کہ قندیل کی ماضی میں زبردستی شادی ہو چکی  ہے، اور ایک بچّہ بھی ہے، تب بھی یہ لگا کہ شاید یہ ایک اور پبلسٹی سٹنٹ ہے۔ کچھ لوگ تو  کھلّم کھلّا قندیل کی موت کے خواہاں تھے مگر باقیوں نے بھی شاید قندیل کو نہیں سمجھا۔ آزادی کے علم برداروں نے آواز تو اٹھا ئی لیکن انگریزی نعرے پاکستان میں اتنا نہیں گونجتے۔ ہمارے کئی اہلِ…

Category : Shikva
Tags :
Abdul_Sattar_Edhi

صرف ایک ایدھی کیوں؟

عبدالستّار ایدھی چل بسے اور ان کی عظمت کے ترانے ٹی وی چینلوں کی زینت بن گئے۔ ۔لوگوں کے جذبات قابلِ دید ہیں مگر مجھے ڈر ہے کہ کہیں ہم انھیں ضائع تو نہیں کردیں گے؟ جس انسان کے گزرنےپرپوری قوم سوگوار ہے، اس سے ہم نے آخر کیا سیکھا ؟ کیا ہم  ان کے دکھلائے ہوئے رستے پر چلنے کو تیّار ہیں؟ کیا ہم اس رستے سے واقف بھی ہیں ؟ ایسے کئی سوالات ہیں جن کا جواب  فی الحا ل تلاش نہیں کیا جاسکتا۔ مگر ان پر ابھی سے توجّہ دینا بے حد ضروری ہے۔ ایدھی صاحب قیامِ پاکستان سے قبل  گجرات میں پیدا ہوئے۔آپ  ۱۱ سال کے تھے جب  آپ کی والدہ کو فالج ہو ا۔ اس بیماری نے آپ کی زندگی پر بہت گہرااثر ڈالا۔  یہی وہ واقعہ ہے جس کے بعد  آپ  عمر رسیدہ (بیمار…

Category : Shikva
Tags :
Miqbal4

پاکستان کے لئے ایک پیغام

ہم ایسے معاشرے میں پلے ہیں  جہاں  بہت سی چیزوں  پر شکوہ  کیا جاسکتاہے۔ ہمارا معاشرہ ہر سطح پر  کمزور  ہے۔۔ ہمارے فیملی سسٹمز ظلم، سیاسی نظام کرپشن،  مذہبی رہنما سیاست کا شکار ہیں۔ ۔ نہ جانے  کتنے لوگ ہیں جنہیں ہمارا معاشرہ  مایوس کرتا ہے۔عورت، غریب، مزدور، مذہبی اقلیتیں، غرض کہ ایک طویل فہرست ہے۔۔اس صورتِ حال میں ہماری ذمہ داری کم نہیں ہوتی بڑھ جاتی ہے۔جنہیں   پورا کرنے  کیلیے    ہمارا  کچھ حقائق کو ذہن نشین  کرنا بےحد اہم ہے۔۔  تبدیلی گھر ہی سے  آتی ہے۔ ۔ہمیں اس تلخ حقیقت کو قبول کرنا ہوگا کہ  ہمارے والدین اپنی پوری کوششوں کے باوجود ہمارے معاشرے کو ترقی کی راہ پر گامزن کرنے میں ناکام رہے ہیں۔ ۔مگر جہاں  ان کے دکھائےہوئے رستے پر بغیر  سمجھے چلنا غلط ہے وہیں  یہ بھی غلط ہے کہ ہم ان کے طور طریقوں کو…

Category : Shikva
Tags :
Amjad-Sabri-dead

امجد صابری کو کیوں مارا گیا؟

امجد صابری کے قتل کے بعد اکثر لوگ یہ سوال کر رہے ہیں کہ ایک ایسا آدمی جو سب سے محبت کرتا تھا،جس کا کوئی دشمن نہیں  تھا،  آخر ا سے کیوں مارا گیا؟ مجھے یہ سوال انتہائی   معصومانہ   لگا ۔۔میں اس  کا جواب ان ہی کے گھر کی سب سے مشہور قوّالی ’بھر دو جھولی میری یا محمدؐ کے کچھ اشعار کی صورت میں پیش کرتا ہوں: تمہارے آستانے سے زمانہ کیا نہیں پاتا، کوئی بھی در سے خالی مانگنے والا نہیں جاتا ۔۔۔ بھر دو جھولی میری یا محمدؐ، لوٹ کر میں نہ جاؤں گا خالی کچھ نواسوں کا صدقہ عطا ہو، در پہ آیا ہوں بن کے سوالی ۔۔۔ زندگی بخش دی بندگی کو، آبرو دینِ حق کی بچا لی، وہ محمدؐ کا پیارا نواسہ ، جس نے سجدے میں گردن کٹا لی ۔۔۔ جو ابنِ مر تضیٰؑ…

Category : Shikva
Tags :
Martin_Luther_King_-_March_on_Washington

کیا ہم تعصّب کا شکار ہیں؟

‘تعصّب’۔ یہ لفظ میں نے اپنے گردونواح میں اکژ سنا ہے، گویا بچپن سے۔ اور حالیہ کراچی میں ایم کیو ایم کے دفاع میں۔ کیا اس میں کوئی سچائی ہے؟ یہ زہر ہمارے گھر میں آیا کیسے؟ برطانوی راج میں بر صغیر کی عوام کے ہر طبقے کا راج سے الگ رشتہ تھا۔ ایک طرف جناح اور اقبال جیسے رہنما تھے جواعلیٰ تعلیم حاصل کر کے ہندوستان کی آزادی کا خواب دیکھتے تھے۔ یہ گروہ زیادہ بڑا نہیں تھا۔ اقبال تو ۱۹۳۰ ءکی دہائی میں ہی وفات پا گئے اور جناح آزادی کے ایک سال بعدجہانِ فانی سے کوچ کر گئے۔ دوسرے گروہ میں وہ تھے جو برطانوی ہندوستانی فوج کے افسران بنے اور پہلی اور دوسری جنگِ عظیم میں  لڑے۔ اس کےسرپرست عوام کو کمتر اور ذلیل سمجھتے تھے۔ اس میں بھرتی ہونے والے ہندوستانی بھی آزادی کا خواب…

Category : Shikva
Tags :
MAnto

چچا سام کے نام پھر ایک خط

‘چچا’۔پچھلی چھ دہائیوں سے آپ کو کسی نے اس نام سے نہیں پکارا ہوگا۔ تو میں نے سوچا کہ شاید مجھے آپ کا بھتیجا نہ ہونے کے باوجو دآپ کو چچا بلانا چاہیے۔ آخر میرے چچا منٹو آپ کو اسی نام سے  بلاتے تھے۔۔  اس عرصے میں اتنا کچھ ہو چکا ہے کہ سمجھ نہیں آتا یہ خط کہاں سے شروع کیا جائے۔ مگر میں نے   اس کی ابتدا کردی ہے اور اب میرا قلم خود ہی فیصلہ کرے گا کہ میں کیا لکھوں؟  تو میں  اس سلسلے کو آگے بڑھا تا ہوں۔۔۔۔۔۔ میرے چچا نے آپ پر تنقید تو بہت کی، اور وہ آپ کو ناگوار بھی گزری، لیکن آپ نے ان کی باتوں کو پوری طرح نظر اندازنہیں کیا۔ مثال کے طور پر، انھوں نے آپ کے ہاں سیاہ فام اشخاص کے خلاف ظلم پر آواز اٹھائی اور…

Category : Shikva
Tags :
FatimaJinnah

عورت گھر کی عزت کیوں نہیں ہوتی؟

’’عورت گھر کی عزت اس لئے نہیں ہوتی کیونکہ اس کو بھی گناہ کرنے کا اتنا ہی حق ہے جتنا مردکو۔‘‘ میں نے اپنے مضمون کا آغازمندرجہ  بالا جملے سے کیا۔ جو  بظاہر عجیب  ہے۔ مگر میں کہوں گا کہ   آخر اس میں کیا غلط ہے؟ کیا گناہ انسانی فطرت  نہیں ہے؟ کیا  زندگی اسی فطرتِ انسانی سے جد و جہد کا نام  نہیں ؟ با لکل ہے!  جب انسان گھر سے نکلتا ہے، تو مرد ہو یا عورت، دنیا کی رنگینیاں اسے جذب کرتی ہیں۔۔مگر بد قسمتی سے یہ خدا کا وہ امتحان ہے جس میں عورت کو اکثر بیٹھنے کی اجازت نہیں دی جاتی۔۔۔۔۔ جن معاشروں میں عورتوں کو یہ حق نہیں دیا جاتا، سب سے زیادہ مظالم وہیں ہوتے ہیں۔ پچھلے چند روز میں ہی ہمارے ملک میں کافی ایسے واقعات رونما ہوئے ہیں  جن سے دل غمگین…

Category : Shikva
Tags :